• Facebook Page: 136926555783
  • YouTube: user/alameeria

Jour­ney of Life


A Doc­u­men­tary on the life of Hazrat Syedna Muham­mad Ameer Shah Gillani Rehmat ullah Alaih has been released. This doc­u­men­tary ” Jour­ney of Life –Hazrat syed Muham­mad Ameer Shah Gillani Rehmat ullah Alaih” cov­ers var­ius aspects of their life includ­ing their faimly back­ground, child­hood, edu­ca­tion, polit­i­cal strug­gle , social and lit­er­ary work and much more

Tazkarah Imam Hus­sain Alaih salam


Tazkarah Hus­sain by Hazrat Syed Noor ul Has­nain…

(تذ کرہ امام حسین علیہ السلام - مختصر خطبہ (نماز جعمہ

حضرت سید محمّد نور الحسنین گیللانی قادری مد ظلہ العالی

سجادہ نشین ابو البرکات حضرت سید حسن بادشاہ رحمتہ الله علیہ

زی الحجہ ١٤٣٥ — اکتوبر 2013

Read more: Tazkarah Imam Hus­sain Alaih salam

رحمت العالمین کانفرنس

علامہ رضا الدین صددیقی صاحب کی انتہائی خوبصورت پر سوز اور پر اثر تقریر

رحمت العالمین کانفرنس 2012 — جمیت سادات

زیر صدارت : حضرت سید نور الحسنین گیلانی مد ظلّلہ عالی المعروف سلطان آغا


Allama Riza-​udin-​sidiqui — Hur­mat e Rasool…

Read more: رحمت العالمین کانفرنس

Rozay kay Ahkam


روزے کے احکام


:مصنف
شیخ القرآن والحدیث، امیرالعصر، حضرت علامہ
سیدمحمد امیر شاہ صاحب قادری گیلانی
المعروف مولوی جی رحمۃ اللہ علیہ

الصلوۃ والسلام علیک یا رسول اللہ
وعلیٰ الک واصحابک یا حبیب اللہ


یاایھا الذین امنو کتب علیکم الصیام کما کتب علی الذین من قبلکم لعلکم تتقون
اے ایمان والو!تم پر روزے فرض کئے گئے جیسے اگلوں پر فرض ہوئے تھے کہ کہیں تمہیں پرہیز گاری ملے۔
(کتر الایمان شریف )

Read more: Rozay kay Ahkam

مولوی جیؒ ؒ : ’وارث علم ‘

From Daily Aaj News Paper dated : 2013-​07-​24

http://​dai​lyaaj​.com​.pk/​e​p​a​p​e​r​/​e​p​a​p​e​r​-​d​e​t​a​i​l​.​p​h​p​?​i​m​a​g​e​=​M​T​U​w​N​z​I​z

ژرف نگاہ ۔۔۔ شبیر حسین اِمام

مولوی جیؒ ؒ : ’وارث علم ‘

جنوب مشرق ایشیاء کے قدیم ترین زندہ تاریخی شہر پشاور کا امتیاز رہا ہے کہ یہ ہر دور میں تہذیب و تمدن کا گہوارہ رہا۔ ماہرین آثار قدیمہ نے پشاور کی پہلی اینٹ کم و بیش چھبیس سو برس قبل رکھنے والوں پر اتفاق کرتے ہوئے کھدائیوں سے ملنے والے جن ظروف کو اوائل پشاور کی نشانی قرار دیا ہے وہ بھی منقش ہیں‘جو اس بات کا ثبوت ہیں کہ دو ہزار سال قبل بھی اس خطے کے رہنے والے بودوباش کے اعتبار سے ممتاز تھے اور اُن کے زیراستعمال برتنوں اور یہاں کے فن تعمیر سے اِس بات کا اندازہ لگانا قطعی دشوار نہیں کہ یہ علاقہ دنیا بھر کی توجہ کا مرکز رہا ہے۔ حتی کہ قبل اسلام بدھ مت کا مرکز اور اس کی ترویج بھی اسی مردم شناس خطے سے ہوئی۔ یوں پشاور کی بات کرتے ہوئے کئی مستند حوالے اور شخصیات کا ذکر تاریخ میں محفوظ ہے‘ جنہیں سیاسی طور پر نہیں بلکہ حقیقی و معنوی اعتبار سے ’’فخر پشاور‘‘ کہا جاتا ہے اور دنیا سے پردہ کرنے کے باوجود بھی ’’سرتاج پشاور‘‘ کی مسندعالیشان پر جلوہ افروز ہیں‘ صرف دیکھنے والی آنکھ اور سننے والے کان ایک بیدار دل کے ساتھ محسوس کر سکتے ہیں پشاور میں جن کے دم کرم سے علم و عرفان کے چراغ ہوئے اور جنہوں نے اپنی پوری حیات ’’وقف پشاور‘‘کئے رکھی۔ سیاسی و سماجی اور روحانی قیادت کے ساتھ بھائی چارے‘ اخوت اور محبت کے فروغ میں اہم کردار ادا کیا وہ سب لافانی ہیں۔ ایسی ہی ایک ممتاز و معروف شخصیت پیرطریقت حضرت سید محمد اَمیر شاہ قادری گیلانی المعروف مولوی جی رحمۃ اللہ علیہ (پیدائش 1920ء‘ وصال 2004ء) کی ہے‘ جو اپنا نام نامی تحریر کرنے سے قبل لفظ ’’فقیر‘‘ کا اضافہ فرما دیا کرتے کہ یہی اُن کا طریق تھا۔ درحقیقت اپنے نام کی مثل علم و دانائی‘ معاملہ فہمی اور سیاسی شعور کی معراج پر فائز تھے۔

Read more: مولوی جیؒ ؒ : ’وارث علم ‘

Tazkara mashaikh e Sarhad

(Mem­oir of the Shuyūkh and Islamic Schol­ars of the Fron­tier, Vol­ume I ) Pages 291

Down­load Here

Salat e Ghousia

(The Ghawthiya Prayer) 72 pages .Pub­lished by Mak­taba e Al Has­san, 1992.

Down­load Here

Hayat-​un-​Nabi

Life( of the Prophet) Trans­la­tion of Ara­bic Jour­nal ‘Tuhfat-​ul– Fahul Fi Istaghasa Bir Rasul’

Down­load Here

Free busi­ness joomla tem­plates

Dis­trib­uted by Site­Ground