• Facebook Page: 136926555783
  • YouTube: user/alameeria

Jour­ney of Life


A Doc­u­men­tary on the life of Hazrat Syedna Muham­mad Ameer Shah Gillani Rehmat ullah Alaih has been released. This doc­u­men­tary ” Jour­ney of Life –Hazrat syed Muham­mad Ameer Shah Gillani Rehmat ullah Alaih” cov­ers var­ius aspects of their life includ­ing their faimly back­ground, child­hood, edu­ca­tion, polit­i­cal strug­gle , social and lit­er­ary work and much more

Rozay kay Ahkam

Arti­cle Index


روزے کے احکام


:مصنف
شیخ القرآن والحدیث، امیرالعصر، حضرت علامہ
سیدمحمد امیر شاہ صاحب قادری گیلانی
المعروف مولوی جی رحمۃ اللہ علیہ

الصلوۃ والسلام علیک یا رسول اللہ
وعلیٰ الک واصحابک یا حبیب اللہ


یاایھا الذین امنو کتب علیکم الصیام کما کتب علی الذین من قبلکم لعلکم تتقون
اے ایمان والو!تم پر روزے فرض کئے گئے جیسے اگلوں پر فرض ہوئے تھے کہ کہیں تمہیں پرہیز گاری ملے۔
(کتر الایمان شریف )



روزے کے احکام


بسم اللہ الرحمن الرحیم
روزے کے احکام
رمضان شریف کا روزہ ہر مسلمان عاقل و بالغ مرد و عورت پر فرض ہے۔ اگر کسی مجبوری سے رمضان شریف کے مہینہ میں ادا نہ کرسکے تو اس کی قضا کرنا فرض ہے۔ رمضان شریف کے روزے کی نیت رات کو اور دن کو دوپہر سے قبل تک جائز ہے اوریہی حکم نفل روزے کی نیت کا بھی ہے اور قضا و کفارہ اور نذر غیر معین کے روزے کی نیت کا رات کو ہی کرلینا ضروری ہے۔ ورنہ روزہ ادا نہ ہوگا۔ مریض اور مسافر کے لیے رمضان شریف میں روزہ رکھنا اور نہ رکھنا دونوں ہی جائز ہے۔ مگر نہ رکھنے کی صورت میں تندرستی کے بعد یاسفر سے واپس آنے کے بعد قضا کرنا فرض ہے اور ایسا بوڑھا شخص جو روزہ رکھنے کی طاقت نہ رکھتا ہو۔ اس ہر روز ایک مسکین کو
کھانا کھلانا لازم ہے۔
(نوٹ) یاد رہے کہ روزہ تین طرح کا ہے۔ ایک عام لوگوں کا ۔ ایک خاص لوگوں کا، اور ایک اخص الخواص کا۔ عام لوگوں کا روزہ یہ ہے کہ صبح صادق سے آفتاب غروُب ہونے تک کھانے پینے اور جماع سے باز رہنا۔ اور خاص لوگوں کا روزہ یہ ہے کہ اپنے آپ کو کھانے پینے اور جماع سے بچانے کے علاوہ زبان کو بُری باتوں کے بولنے اور کان کو بُری باتوں کو سننے سے اور آنکھوں کو ناجائز چیزوں کے دیکھنے سے بچانا۔ اور اخص الخواص کا روزہ یہ ہے کہ مذکورہ تمام چیزوں ک
ساتھ ساتھ اپنے خیال کو بھی ہر وقت اللہ کی طرف لگائے رکھنا۔

اس مختصر سی تمہید کے بعد روزہ کے مندرجہ ذیل مسائل فقہ امام ہمام سیدنا ابو حنفیہ سے اخذ کرکے درج کیے جاتے ہیں۔ اگرچہ یہ مسائل بہت مختصر ہیں لیکن عام الوقوع ضروریات کو حاوی ہیں۔ اگر کوئی شخص ان کو ضبط کرے تو حدیث شریف کے مضمون کے مطابق اجر عظیم پائے گا۔


۱
۔ اگر کوئی مسافر سفر سے واپس آکر اورمریض اپنے مرض سے کچھ دن اچھا رہ کر انتقال کر جائے اور اس کے ذمہ رمضان شریف کے روزے باقی ہوں تو مریض جتنے دن اچھا رہا اور مسافر جتنے دن گھر پر آکر رہا اتنے دن کے روزے کی قضا کے بدلے اس کے وارث بعوض ہر روزہ ایک مسکین کو کھانا کھلادیں۔

۲
۔ رمضان شریف کاچاند اگر کوئی شخص تنہا دیکھے اور آسمان پر اس روز گردو غبار یا بادل نہ ہوں تو اس شخص پرروز ہ رکھنا ضروری ہوجائے گا۔ اور دوسرے لوگوں پر فرض نہ ہوگا۔ اور اگر بادل یا گردوغبار ہو تو ایک عادل مسلمان کی گواہی کی بدولت سب لوگوں پر روزہ فرض ہوجائے گا۔ خواہ گواہی دینے والامرد ہو یا عورت۔ آزاد ہو یا غلام۔

۳
۔ اگر آسمان صاف ہو تو ایک جماعت کی گواہی سے تمام لوگوں پر روزہ فرض ہوجائے گا۔ لیکن عید کا چاند اگر دو عادل شخصوں نے دیکھا ہو اور آسمان پر گردوغبار ہو تو ان دونوں کی گواہی پر عید کی جائی گی۔ اور اگر گردوغبار نہ ہو تو ایک جماعت کی گواہی کا اعتبار ہوگا۔

۴
۔ بھول کر کھانے پینے سے روزہ نہیں ٹوٹتا۔

۵
۔ رمضان شریف کے دنوں میں احتلام ہوجانے سے روزہ نہیں ٹوٹتا ۔

۶
۔ سر میں تیل ڈالنا حالت روزہ میں جائز ہے۔

۷
۔ قے تھوڑی ہو یا زیادہ اس سے روزہ خراب نہیں ہوتا۔ لیکن قصداً قے کرنے سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے اور قضا لازم ہے۔

۸
۔ حلق میں گردوغبار اور دُھواں کے گھُس جانے سے روزہ خراب نہیں ہوتا۔

۹۔ حلق میں مچھر یا مکھی کے چلا جانے سے روزہ نہیں خراب ہوتا۔

۱۰
۔ کا ن میں تیل ڈالنے سے روزہ خراب ہوجاتا ہے۔ اور قضا لازم ہوگی۔

۱۱
۔ کسی نے روزہ کی حالت میں غرغرہ کیا اور پانی حلق میں چلا گیا۔ روزہ ٹوٹ گیا اور اس روزے کی قضا فوری ہے۔

Tazkara mashaikh e Sarhad

(Mem­oir of the Shuyūkh and Islamic Schol­ars of the Fron­tier, Vol­ume I ) Pages 291

Down­load Here

Salat e Ghousia

(The Ghawthiya Prayer) 72 pages .Pub­lished by Mak­taba e Al Has­san, 1992.

Down­load Here

Hayat-​un-​Nabi

Life( of the Prophet) Trans­la­tion of Ara­bic Jour­nal ‘Tuhfat-​ul– Fahul Fi Istaghasa Bir Rasul’

Down­load Here

Free busi­ness joomla tem­plates

Dis­trib­uted by Site­Ground